ہاتھ پکڑ کر لکھواتا ہے
دردکی باتیں درد معلم
ھو کا عالم
ھو کی چپ ہے
باتیں کرتی
خوشبو چپ ہے
پھیل رہی ہے اندر باہر
خوشبو باطن خوشبو ظاہر
اجلی اجلی طاہر طاہر
گہری چپ ہے
ھو کا عالم
درد سلادے
درد جگا دے
درد ہی بستہ
درد ہی رستہ
ہاتھ پکڑ کر لکھواتا ہے
درد کی باتیں، درد معلم